منہاج پبلک گرلزہائی سکول پننوال میں شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری کی 70ویں سالگرہ انتہائی جوش و خروش سے منائی گئی

ٹوبھہ (ملک ظہیر اعوان)منہاج پبلک گرلزہائی سکول پننوال میں شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری کی 70ویں سالگرہ انتہائی جوش و خروش سے منائی گئی۔اس پر مسرت موقع پر ادارہ ھذا کے پرنسپل ذوالفقار علی چشتی،صاحبزادہ پیر یاسر عرفات کرمانی و دیگرنے سٹاف اور بچوں کے ساتھ مل کر کیک کاٹا۔بچوں نے بھی اپنے قائد کو خراج تحسین پیش کیا،تقریب میں الحاج عبدالغفور چوہدری صدر پاکستان عوامی تحریک ضلع جہلم، الحاج عزیز الرحمن بلال گڈز غریب وال سیمنٹ، الحاج محمد اصغر چوہدری صدر تحریک منہاج القرآن تحصیل پنڈ دادنخان، حاجی محمد اسلم، علامہ قاری بشیر احمد طاہر، رمضان مصطفوی، کاشف محمود مغل، چوہدری محمد راسب مارتھ، مسز ذوالفقار علی چشتی نے خصوصی شرکت کی۔ اس موقع پرپیر سید یاسر عرفات کرمانی القادری نے کہا کہ شیخ السلام جیسی ہستی کو بعد میں آنے والے نسلیں ایک جھلک کوترسیں گے اور وہ کہیں گے کہ کاش ہم اس دور میں زندہ ہوتے۔الحاج عبدالغفور چوہدری نے کہا کہ مجھے اس ادارے میں آ کر بہت خوشی محسوس ہو رہی ہے میں بہت سی جگہوں پر جاتا ہوں لیکن آج کا پروگرام دیکھ کر مجھے محسوس ہوا ہے کہ ذوالفقار علی چشتی کتنی محنت سے کام کر رہے ہیں۔ بچوں کی قائد سے والہانہ محبت دیکھ کر بہت خوشی ہوئی ہے۔پرنسپل ذوالفقار علی چشتی نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اللہ کا شکر ادا کرتے ہیں کہ شیخ الاسلام جیسی عظیم ہستی کے عہد میں زندہ ہیں۔شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری اسلام کے لیے منفرد، بہترین اور نمایاں سکالر ہیں۔انھوں نے تعلیم کو عام کرنے میں قابل تقلید مثالیں قائم کیں۔اور ملک سے جہالت کے اندھیرے دور کرنے میں اپنا بھرپور کردار ادا کیا وہ اس پر فتن دور میں امید اور روشنی کا چراغ ہیں۔انہوں نے دہشت گردی کے خاتمے کے لیے جو خدمات سر انجام دی ہیں اس پر انسانیت کو ہمیشہ فخر رہے گا ان کی زندگی کا مقصد اسلام کی خدمت، اللہ اور اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے انسانوں کا ٹوٹا ہوا تعلق بحال کرنا ہے۔آپ حق و سچ کی جرات مندانہ آواز ہیں۔پاکستان اور عالم اسلام کو ان کی راہنمائی کی بہت ضرورت ہے۔