لا ک ڈاون کے متاثرین میں راشن تقسیم نا ہونے سے تحصیل پنڈ دادنخان میں بھوک افلاس نے ڈیرے ڈال لئے

پنڈ دادنخان (ملک ظہیر اعوان)تحصیل پنڈ دادنخان میں بھوک افلاس نے ڈیرے ڈال لئے حکومت پنجاب اور وفاقی حکومت کی طرف سے لا ک ڈاءون کے متاثرین میں ایک روپے کا راشن بھی تقسیم نہیں کیا گیا مخیر حضرات اور چند این جی اوز اپنی مدد آپکے تحت متاثرین میں راشن تقسیم کر رہے ہیں جو تنظیم انتظامیہ سے راشن تقسیم کرنے کی اجازت لیتی ہے انتظامیہ اس میں دھکے سے اپنا حصہ ڈال لیتی ہے جو لسٹیں ڈی سی جہلم یا اسسٹنٹ کمشنر پنڈ دادنخان کے پاس ہیں وہ این جی اوز کو دے دی جاتی ہیں اور اسے احساس کفالت پروگرام کا نام دیا جارہا ہے حلقہ کے حکومتی نمائندے مکمل طور پر روپوش ہیں این اے67جہلم کے وفاقی وزیر فواد چوہدری مکمل طور پر علاقائی سکرین سے غائب ہیں اور حلقہ پی پی27پنڈ دادنخان کے مسلم لیگ (ن) کے ایم پی اے حاجی ناصر محمود لِلہ نے بھی عوام کی خبر گیری نہیں کی ،حلقہ کے غریب عوام سیاسی طور پر لاوارث ہو چکے ہیں لاک ڈاءون سے متاثرہ افراد کو نہ تو پی ٹی آئی کے نمائندے اور نہ ہی مسلم لیگ ن کے نمائندے لفٹ کروا رہے ہیں ان کے علاوہ بھی انتخابات میں حصہ لینے والے دیگر شائقین بھی خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں حکمران طبقہ صرف الفاظ کی ہیرا پھیری میں مگن ہے احساس کفالت پروگرام کے تحت دی جانے والی رقم بھی صرف سابقہ بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے تحت لینے والی خواتین کو ہی مل رہی ہے اس سے کرونا وائرس کے پھیلاءو کی روک تھام کے لئے کئے گئے لاک ڈاءون سے متاثرہ افراد کی کوئی مدد نہیں ہو رہی یہ تووہی بیوہ اور غریب خواتین ہیں جو عرصہ دراز سے یہ امداد وصول کر رہی ہیں ۔