مانچسٹر کے کونسلر کو پاکستان میں شادی میں شرکت مہنگی پڑ گئی

برطانیہ کی لیبر پارٹی نے منچسٹر شہر کے اپنے ایک کونسلر کو عالمی وبا کورونا وائرس کے دوران پاکستان میں شادی میں شرکت کرنتے پر معطل کردیا ہے۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق مانچسٹر کے وہالی رینج کے کونسلر آفتاب رزاق نے پنجاب کے شہر کھاریاں میں ایک شادی میں شرکت کی تھی اور اپنی تصاویر شوشل میڈیا پر شیئر کردی تھیں۔

برطانیہ میں عالمی وبا کورونا وائرس (کووڈ-19) کے موجودہ ضوابط کے تحت چھٹیوں یا دیگر تفریحی مقاصد کے لیے بیرونِ ملک سفر کرنا غیر قانونی ہے۔

سماجی رابطے پر شیئر کی گئی تصاویر میں آفتاب رزاق کو بظاہر سماجی دوری کے ضوابط کی خلاف ورزی اور بغیر ماسک پہنے دیکھا جا سکتا ہے، جو کہ پاکستان کے کووڈ-19 ضوابط کے تحت بھی پہننا لازم ہے۔

مزید پڑھیں: ہالینڈ: کورونا سے بچاؤ کیلیے عائد کرفیو کی خلاف ورزی اور لوٹ مار

مانچسٹر لیبر کے سیکریٹری کونسلر پیٹ کارنی نے بی بی سی کو بتایا کہ وہ ‘ان معاملات کی گہرائی سے جانچ’ کریں گے۔

اُنھوں نے کہا کہ لیبر گروپ نے تصاویر دیکھ لی ہیں مگر ‘اپنی بہترین کوششوں کے باوجود’ وہ وہالی رینج کے کونسلر سے رابطہ قائم کرنے میں کامیاب نہیں ہوئے ہیں جنھیں جنوری میں کورونا وائرس کی ویکسین لگ چکی ہے۔

پیٹ کارنی نے کہا ‘مانچسٹر کے تمام کونسلرز کو کووڈ ضوابط کی سخت پابندی کرنی ہوگی اور ہم ہر اس فرد کے خلاف اقدام کریں گے جو ایسا نہیں کرے گا۔’

لبرل ڈیموکریٹ اپوزیشن رہنما جان لیچ نے کہا کہ وہ اس مبینہ خلاف ورزی سے ‘انتہائی حیران’ ہیں۔

انھوں نے آفتاب رزاق سے مستعفی ہونے کا مطالبہ ک کرتے ہوئے کہا ہے کہ ‘مجھے سمجھ نہیں آتا کہ ایک کونسلر کا ہزاروں میل کا سفر کر کے ایک شادی میں شرکت کرنا اور پھر اسے فیس بک پر ڈالنے کا کیا جواز ہوسکتا ہے کیونکہ اس سے انتہائی بری مثال قائم ہوتی ہے۔’

انھوں نے کہا ‘مجھے اس کی کوئی معقول وضاحت سمجھ نہیں آ رہی، اور اگر اس کی کوئی وضاحت نہیں ہے تو اُنھیں مستعفی ہوجانا چاہیے۔’

The post مانچسٹر کے کونسلر کو پاکستان میں شادی میں شرکت مہنگی پڑ گئی appeared first on ہم نیوز.

ہم نیوز