ہماری وزیراعظم اور وزیر داخلہ سے گزارش ہے کہ اوورسیز کے مسائل پر خصوصی توجہ دی جائے

پنڈ دادنخان ( ملک ظہیر اعوان)وزیر اعظم عمران خان نے اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل کے بارے میں وعدہ کیا تھا کہ جلد حل ہوں گے جہاں تک مسائل کا تعلق ہے وہ تو سینکڑوں کی تعداد میں ہیں. مگر اہم مسلہ پاسپورٹ کی تجدید کا ہے. ان لائن سہولت ہونے کے باجود تاخیر کر دی جاتی ہے ہر پاکستانی جس نے پاسپورٹ یا شناختی کارڈ بنوا رکھا ہے اس کا ریکارڈ نادرا اور امیگریشن کے پاس موجود ہوتا ہے.. پھر پاسپورٹ یا شناختی کارڈ کی تجدید پہ تاخیر کیوں.. صرف نیا فوٹو اور تاریخ ہی تو تبدیل کرنی ہوتی ہے… اسکے علاوہ جب ہم پاکستان سے پاسپورٹ یا شناختی کارڈ بنواتے ہیں تو اس کی فیس بیت زیادہ لی جاتی ہے… فرق صرف اردو اور انگریزی کی لکھائی کا ہوتا یے… پھر یہ ظلم کیوں…. اس کے علاعہ جب ہم نادرا کے پاس جاتے ہیں کہ شناختی کی تجدید کروانی ہے تو کہتے ہیں کہ یہ فارم اٹیسٹ کروا کے لے آئیں… کیا نادرا کے پاس ہمارا ریکارڈ موجود نہیں ہوتا.. کیا ہمارے فنگر پرنٹ ان کے پاس موجود نہیں ہوتے… کیا وہ خود کنفرم نہیں کر سکتے… خدارا یہ اٹیسٹ کرنے کروانے والا سلسلہ ختم ہونا چاہیے… ہمیں اس حکومت سے بہت ساری توقعات تھیں مگر افسوس خالی نعروں کی حد تک ہی نظر آ رہی ہیں…
ہماری وزیراعظم اور وزیر داخلہ سے گزارش ہے کہ اوورسیز کے مسائل پر خصوصی توجہ دی جائے ان خیالات کا اظہار اوورسیز پاکستانی ارشد امام نے بحرین سے ٹیلی فونک گفتگو کرتے ہوے کیا