اندرون شہر میں بچوں کی نشو نما کے لئے پارکوں کانہ ہونا نو نہالوں کے ساتھ سراسر نا انصافی

جہلم(چوہدری عابد محمود +چوہدری دانیال عابد) اندرون شہر میں بچوں کی نشو نما کے لئے پارکوں کانہ ہونا نو نہالوں کے ساتھ سراسر نا انصافی ہے، پارکوں کی عدم دستیابی کیوجہ سے بچوں میں مناسب نشونما نہیں ہوپاتی،بچوں کے والدین زہنی کوفت اور بچے چڑ، چڑے پن کا شکار، شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب، کمشنر راولپنڈی، ڈپٹی کمشنر سے سرکاری اراضی میں پارکس قائم کرنے کا مطالبہ کر دیا۔ تفصیلات کیمطابق ڈسٹرکٹ سپورٹس آفیسر کی عدم دلچسپی و عدم توجہی کے باعث لاکھوں افرادکی آبادی پر مشتمل شہر میں بچوں کی بہتر نشو نما کے لئے سرکاری طور پر کوئی پارک قائم نہیں جہاں بچے کھیل کود کے ساتھ جسمانی ورزش کر کے صحت مند رہ سکیں، شہر میں قائم اجڑے ہوئے پارکوں کی طرف بھی انتظامیہ کوئی توجہ نہیں دے رہی، جس کی وجہ سے شہری بچوں کو زہنی و جسمانی ورزش کروانے سے محروم ہیں، سابق گورنر پنجاب چوہدری الطاف حسین (مرحوم) کے نام سے منسوب الطاف پارک، ضلع کچہری سے ملحقہ جناح پارک تو قائم کیا گیا۔ جہاں بچوں کیلئے مختلف اقسام کے الیکٹرک و مینول جھولے نصب کئے گئے تھے اور کھیل کے لئے میدان بھی موجودتھے جہاں روزانہ کی بنیاد پر اندرون شہر سمیت دیگر شہروں سے آنے والے بچوں کی بڑی تعداد سیر و تفریح کرنے کے لئے یہاں آتی تھی۔ جو اب ضلعی انتظامیہ اور میونسپل کارپوریشن کی عدم توجہی کے باعث تباہ و برباد ہو کر جنگل کی منظر کشی کر رہے ہیں، جہاں شہر میں ہرطرف اونچی اونچی وسیع و عریض عمارتیں، بلڈنگز، شادی ہالز،میرج گارڈنز، شاپنگ مالزبنائے جا رہے ہیں لیکن اس کے برعکس بچوں کی سیر و تفریح کے لئے پارکس کی طر ف کوئی توجہ نہیں دی جارہی جس کیوجہ سے بچوں کے والدین پریشان جبکہ بچے چڑچڑے پن کا شکار ہو رہے ہیں، شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیاہے کہ شہر کے اندر واقع سرکاری جگہوں پر بچوں کی نشونما کے لئے پارک قائم کئے جائیں تاکہ بچے کھیل کود کر صحت مندانہ سرگرمیاں جاری رکھ سکیں۔