جہلم شہر سمیت ضلع بھر میں کم وزن روٹی و نان کی زائد نرخوں پرفروخت جاری

جہلم(چوہدری عابد محمود +عبدالغفارآذاد)جہلم شہر سمیت ضلع بھر میں کم وزن روٹی و نان کی زائد نرخوں پرفروخت جاری۔ضلعی انتظامیہ، پرائس کنٹرول مجرٹیس نے شہریوں کو ناجائز منافع خوروں تندور و ہوٹل مالکان کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا۔شہریوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار، چیف سیکرٹری پنجاب سے نوٹس لے کرکارروائی کامطالبہ کردیا، بااثر ناجائز منافع خوروں کے خلاف کارروائی اور ضلعی پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو فعال بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ضلع جہلم کی چاروں تحصیلوں میں تندور اور ہوٹل مالکان نے نان و روٹی کے من مرضی کے ریٹس مقرر کرکے مہنگے داموں نان و روٹی کی فروخت شروع کر رکھی ہے، روٹی اور نان کے مقررہ وزن 100گرام کی بجائے 70 گرام اور روٹی کی قیمت 12 روپے،اسی طرح نان کی قیمت بھی15روپے میں فروخت شروع کر دی گئی ہے ضلعی انتظامیہ اور پرائس کنٹرول مجسٹریٹس بااثر تندور و ہوٹل مالکان کے سامنے بے بس دکھائی دینے لگے۔، انتظامیہ نے صارفین کو ناجائز منافع خوروں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا۔شہریوں کا کہنا ہے کہ انتظامیہ نے قیمت پنجاب ایپ پر روٹی کی قیمت7 روپے جبکہ نان کی قیمت 12روپے مقرر کررکھی ہے، لیکن شہر سمیت ضلع بھر میں تندور و ہوٹل مالکان من مرضی کے نرخ وصول کررہے ہیں جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ گراں فروشی کے مرتکب دکانداروں کو متعلقہ افسران کی سرپرستی حاصل ہے جس کیوجہ سے گراں فروشوں نے اپنی الگ ریاست قائم کر رکھی ہے، شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب، چیف سیکرٹری پنجاب سے نوٹس لینے اور گراں فروشی کے مرتکب دکانداروں اور ان کی سرپرستی کرنے والے افسران کے خلاف قانونی کارروائی کرنے کا مطالبہ کیاہے۔