یونین کونسل احمد آباد کے گاؤں لنگر مائی طوقاں کی لنک روڈ عرصہ دراز سے ٹوٹ پھوٹ کا شکار

پنڈ دادنخان ( ملک ظہیر اعوان) یونین کونسل احمد آباد کے گاؤں لنگر مائی طوقاں کی لنک روڈ عرصہ دراز سے ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہو کر تباہ و برباد ہو چکی ہے جس پر پیدل چلنا بھی دشوار ہو چکا ہے لیکن سابقہ و موجودہ حکمران طبقے نے اس بنیادی مسئلے کے حل کی طرف کوئی توجہ ہی نہیں دی،لنگر جانے والی چھوٹی بڑی ٹریفک کچہ راستہ استعمال کرتی ہے اور جب بارش ہو جاتی ہے تو ان راستوں پر کئی کئی ماہ تک پانی کھڑا رہتا ہے اور عوام مجبوراً گاڑیاں اس ٹوٹی پھوٹی سٹرک سے گذرانا پڑتی ہیں جو کہ انتہائی مشکل و دشوار گذار راستہ ہے گزشتہ سالوں میں جب ایک ماہ میں یہاں دو شہداء کے تابوت آئے تو ساتھ آنے والے مہمانوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑا جس کے باعث شہداء کے لواحقین اور اہل علاقہ نے لنگر لنک روڈ کی پختگی کا مطالبہ کر دیا حلقہ کے وفاقی وزیر چوہدری فواد حسین نے وعدہ کیا کہ ہم اس لنک روڈ کو مرزا بابر شہید کے نام سے منسوب کر کے اسے پختہ بھی کرائیں گے لیکن اہلیان لنگر کی بدقسمتی کی انتہاء ہو گئی جب وفاقی وزیر نے منڈاھڑ چوک میں صرف ایک بورڈ آویزاں کروا کر اپنی ذمہ داری پوری کر کے چلتے بنے روڈ کی حالت آج بھی جوں کی توں ہے نڑومی ڈھن واٹر سپلائی سکیم کے پائپ تو لنگر تک پہنچے ہوئے چار سال گذر چکے ہیں پینے کے پانی کا کنکشن آج تک نہیں مل سکا،گاؤں میں عرصہ دراز سے طلباء کے لئے پرپرائمری سکول ہے جو ابھی تک ایلمینٹری کا درجہ بھی حاصل نہیں کر سکا ملک محمد صفدر،حاجی غلام مرتضے چوہان،ملک جاوید چوہان،ملک عنصر چوہان اور ملک امجد چوہان نے وفاقی وزیر چوہدری فواد حسین سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ہمارے تمام مسائل ترجیح بنیادوں پر حل کروائیں تا کہ ہم بھی آسان زندگی بسر کر سکیں ہماری لنگر لنک روڈ کا فاصل صرف تین،چار کلو میٹر ہے ہمیں سفر کرنے میں سخت مشکلات کا سامنا رہتا ہے ہمارا مسئلہ ترجیح بنیادوں پر حل کرایا جائے