وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار کے کاشتکاروں کیلئے کیے گئے اقدامات نعروں تک محدود

پنڈدادن خان(ملک ظہیر اعوان)وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار کے کاشتکاروں کیلئے کیے گئے اقدامات نعروں تک محدود ہو کر رہ گئے تحصیل پنڈدادن خان میں کسانوں کو ایک کے بعد ایک مصیبت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے،علاقہ تھل اور علاقہ پھپھرہ میں مویشیوں کی بروقت موسمی ویکیسن نہ ھونے کے باعث “منہ کھرُ” اور گل گھوٹو کی بیماری عام ہونے کی وجہ سے متعدد جانور ہلاک ھو چکے ہیں مگر محکمہ لائیو سٹاک سب اچھا کی رپورٹ دینے میں مصروف ہے، کسانوں نے بتایا کہ محکمہ لائیو سٹاک کا عملہ پرائیویٹ کاموں کو ترجیح دیتا ھے اور آج تک سرکاری طور پر کسی بھی مویشی کو موسمی حفاظتی ویکسینشن نہیں کی گئی اگر یہ ہی صورت حال رہی تو مویشیوں کی بڑے پیمانے پر ہلاکتوں کا خدشہ ہے کسانوں نے وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار سے مطالبہ کرتے ھوے کہا کہ تحصیل بھر میں خصوصا علاقہ پھپھرہ اور علاقہ تھل میں ہنگامی بنیادوں پر مویشوں کی حفاظتی ویکسینیشن کرائی جاے مویشیوں کو ویکیسن لگا کر انکی حفاظت یقینی بنائی جائے دریں اثناء چند روز قبل تیز ہواؤں اور آندھی کے باعث کسانوں کی کھڑی فصلیں تباہ ہو چکی ہیں گندم کے گوشے آپس میں ٹکرا ٹکرا کر خالی ہو چکے ہیں گندم کے دانے کھتیوں میں بکھرے پڑے ہیں جو گندم باقی بچی ہے اس کی پیدوار میں 60فیصد کمی واقع ہو گئی ہے علاقہ کے لوگوں نے وزیر اعلی پنجاب اور کمشنر راولپنڈ ی سے مطالبہ کیا ہے کہ کسانوں کے نقصان کا ازالہ کیا جائے