برطانوی سپریم کورٹ نے اوبرڈرائیوروں‌کو ملازمین کے برابرحقوق دے دئیے،کم از کم تنخواہ ،چھٹی پر بھی تنخواہ

برطانوی سپریم کورٹ نے 2016 سے چلنے والے کیس میں اوبر کے خلاف فیصلہ جاری کر دیا۔اس فیصلے میں‌کہا گیا ہے ہے اوبر ٹیکسی ڈرائیوروں‌کو سیلف ایمپلائیڈ کی بجائے ملازمین کی سہولیات دے.برطانیہ میں‌اس وقت 45000 کے قریب اوبر ڈرائیور صرف لندن میں موجودہیں.فیصلے کے مطابق ڈرائیوروں‌کو کم از کم اجرت 8.72£ اجرات فی گھنٹہ دی جائے گی. یہ کیس پاکستانی یاسین اسلم اور دیگر نے کیا تھا۔ جس میں مطالبہ کیا گیا تھا اوبر کو ڈرائیوروں کو وہی سہولیات دینی چائیں جو برطانیہ کے قانون کے مطابق باقی کمپنیاں دیتی ہیں۔ جن میں تنخواہ کے ساتھ چھٹی، بینک ہالیڈے، پینشن، بیماری کی صورت میں الاؤنس وغیرہ شامل ہیں۔ کیس 2016 سے چلنے کی وجہ سے متوقع طور پر ڈرائیوروں کو پندرہ سے بیس ہزار روپے تک بھی ادا کئے جائیں گے۔